بھارت نے سدھو کے ٓآگے گھٹنے ٹیک دئیے

اریبہ نثار - ویب ایڈیٹر - بول نیوز

07th November, 2019

بھارتی سیاست داں و سابق کرکٹر نوجوت سنگھ سدھو کے ساتھ اداکار سنی دیول بھی پاکستان آنے کے لیے تیار ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سدھو نے کرتارپور راہداری کی افتتاحی تقریب میں شرکت کے لیے بھارتی وزارت خارجہ کو 3 بار اجازت کے لئے خط لکھا تھا تاہم سدھو کے جواب میں بھارتی حکومت نے پاکستان میں کرتارپور راہداری کی تقریب میں شرکت کی اجازت دے دی ہیں۔

  سدھونے کہا باباگرونانک جی کے 550 ویں جنم دن کےموقع پردربارصاحب کاافتتاح تاریخی موقع ہے،جبکہ اس عنایت پرحکومت پاکستان خصوصاً وزیراعظم عمران خان کےشکرگزارہیں۔

 سینیٹرفیصل جاویدنےسدھوکےاس اعلان کاخیرمقدم کرتےہوئےکہا کہ وزیراعظم 9 نومبرکواس تاریخی افتتاحی تقریب میں بطورمہمان خاص شریک ہوں گے۔

  فیصل جاویدنےنوجوت سنگھ سدھوسمیت پوری دنیا کےسکھوں کودربارصاحب کےافتتاح کی مبارک باد پیش کرتے ہوئے کہاکہ سدھوسمیت تمام سکھ یاتریوں کےخیرمقدم اورمیزبانی کےلیےتیارہیں۔

واضح رہےکہ حکومت پاکستان بابا گرونانک کے 550ویں یوم پیدائش کے موقع پر کرتارپورراہداری کھولنے کے لیے پُرعزم ہے،کرتارپورراہداری کی افتتاحی تقریب نونومبرکو ہوگی، جس میں وزیراعظم عمران خان اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ شرکت کریں گے، افتتاح کے بعد یہ پاکستان کا سب سے بڑا گردوارہ بن جائے گا۔

 گزشتہ روز قبل بھارتی میڈیا کے مطابق کانگریس کے رہنما نوجوت سنگھ سدھو نے وزیر خارجہ ایس جے شنکر کو ایک مرتبہ پھر خط لکھا تھا اس کے علاوہ سدھو نےخط میں پاکستان میں 9 نومبر کو ہونے والی کرتارپورراہدری کی افتتاحی تقریب میں شرکت کی اجازت بھی طلب کی تھی۔

 اجازت نامےمیں تاخیر یا جواب نہ دینا پر سدھو نے کہا تھا کہ اگر وزارت خارجہ کی طرف سے میرے تیسرے خط  کاجواب بھی نہیں دیا گیا تو میں لاکھوں سکھ یاتریوں کی طرح پاکستان چلاجاؤں گا۔

دوسری طرف نوجوت سنگھ سدھو نے سینیٹر فیصل جاوید سے ٹیلیفونک رابطہ کرکے کہا تھا  کہ دربار صاحب کے افتتاحی تقریب میں شرکت کے لیے بے قرار ہوں، دنیا بھر میں بسنے والے کروڑوں سکھ اپنی مقدس دھرتی کی زیارت کے لیے بے تاب ہیں۔