Advertisement
Advertisement
Advertisement
Advertisement

ہوسکتا ہے جج کی عدت نکاح کیس سے الگ ہونے کی وجہ درست نہ ہو، اسلام آباد ہائیکورٹ

Now Reading:

ہوسکتا ہے جج کی عدت نکاح کیس سے الگ ہونے کی وجہ درست نہ ہو، اسلام آباد ہائیکورٹ

ہوسکتا ہے جج کی عدت نکاح کیس سے الگ ہونے کی وجہ درست نہ ہو، اسلام آباد ہائیکورٹ

اسلام آباد: دورانِ عدت نکاح کیس میں اسلام آباد ہائی کورٹ نے ریمارکس دیے ہیں کہ ہو سکتا ہے سیشن جج کی کیس سے الگ ہونے کی وجہ درست نہ ہو۔

اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس طارق محمود جہانگیری نے سابق چیئرمین پی ٹی آئی کی اہلیہ بشریٰ بی بی کی عدت کے دوران نکاح کیس کے خلاف درخواست پر سماعت کی۔

دوران سماعت جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے استسفار کیا کہ اس درخواست پر کیا اعتراض ہے؟ جس پر بشریٰ بی بی کے وکیل سلمان اکرم راجہ نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ میں حقائق بتاتا ہوں کہ اس عدالت سے کیوں رجوع کیا ہے، ایک ایڈمنسٹریٹو آرڈر جوڈیشل ریلیف لینے سے نہیں روک سکتا۔

وکیل نے عدالت کو بتایا کہ سیشن جج شاہ رخ ارجمند نے سزا کیخلاف اپیلوں پر فیصلہ سنانے کی تاریخ مقرر کی تھی، 23 مئی کو سیشن جج نے کہا 29 مئی کو فیصلہ سنائیں گے۔

جسٹس میاں گل حسن نے استفسار کیا کہ کیا دلائل 23 کو مکمل ہوچکے تھے؟ کیا 29 مئی کو شکایت کنندہ نے تحریری طور پر جج پر عدم اعتماد کا اظہار کیا؟ آپ کہتے ہیں کہ سیشن جج کو واپس معاملہ بھجوائیں یا ہائی کورٹ خود سن لے؟

Advertisement

وکیل سلمان اکرم راجہ نے کہا کہ 29 مئی کو تحریری درخواست نہیں دی لیکن اس سے پہلے عدم اعتماد کی درخواست دی جو مسترد ہو گئی تھی۔

بانی پی ٹی آئی کے وکیل نے  دلائل دیتے ہوئے کہا کہ چیف جسٹس نے ایک ایڈمنسٹریٹو آرڈر کے ذریعے کیس ٹرانسفر کر دیا جس کی کاپی نہیں مل سکی، ایک ایڈمنسٹریٹو آرڈر جوڈیشل ریلیف لینے سے نہیں روک سکتا۔

وکیل سلمان اکرم راجہ نے کہا کہ جب سیشن جج کے ایک کیس کی سماعت مکمل کر کے فیصلہ محفوظ کر لیا تو پھر وہ فیصلہ سنائے بغیر کیس کیسے سیشن جج کے ماتحت ایڈیشنل سیشن جج کو ٹرانسفر کر دیا گیا؟

جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے بانی پی ٹی آئی کے وکیل سے استفسار کیا کہ ہو سکتا ہے کہ سیشن جج کی کیس سے الگ ہونے کی وجہ درست نا ہو لیکن جب جج خود کیس سے الگ ہو جائے تو پھر کیا اسے دوبارہ بھجوانا مناسب ہے؟

وکیل سلمان اکرم راجہ نے کہا کہ ایڈیشنل سیشن جج افضل مجوکا کو کیس ٹرانسفر کیا گیا ہے، تین ماہ کی سماعت کے بعد جب کیس نتیجہ اخذ ہو گیا تو اب نئے سرے سے شروع کیا جا رہا ہے۔

عدالت نے استفسار کیا کہ آئندہ تاریخ سماعت کیا ہے؟ جس پر وکیل نے کہا کہ ایڈیشنل سیشن جج کے پاس آج سماعت کے لیے مقرر ہے۔

Advertisement

بعد ازاں عدالت نے دوران عدت نکاح کیس میں بشریٰ بی بی کی درخواست پر فریقین کو 13 جون کے لیے نوٹس جاری کردیے۔

Advertisement
Advertisement
مزید پڑھیں

Catch all the Business News, Breaking News Event and Latest News Updates on The BOL News


Download The BOL News App to get the Daily News Update & Live News


Advertisement
آرٹیکل کا اختتام
مزید پڑھیں
میں چاہتا ہوں ایسا آرڈر دوں کہ کسی کو برا نہ لگے، چیف جسٹس عامر فاروق
نئے آنے والے وکلاء عدالتی اخلاقیات نہیں سمجھتے، چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ
جسٹس عالیہ نیلم نے لاہور ہائیکورٹ کی پہلی خاتون چیف جسٹس کا حلف اٹھالیا
190 ملین پاؤنڈ کیس: بانی پی ٹی آئی کی موجودگی میں پرویز خٹک کا بیان ریکارڈ
انصاف کے تقاضوں کو پورا کرنے کیلئے چیف جسٹس میرے کیسز پر سماعت نہ کریں، بانی پی ٹی آئی
مخصوص نشستوں کا کیس: ن لیگ کی تحریری معروضات سپریم کورٹ میں جمع
Advertisement
توجہ کا مرکز میں پاکستان سے مقبول انٹرٹینمنٹ
Advertisement

اگلی خبر