اخروٹ کھائیں، دل دماغ مضبوط بنائیں

ثمرا مظہر - ویب ایڈیٹر - بول نیوز

14th January, 2020

انسانوں اوردیگر جانداروں کیلئےنیند ایک ضرورت ہے۔نیند جسم اور دماغ کو آرام عطا کرتی ہےاور اعصاب کی تھکن دور کرتی ہے۔ نیند کا دورانیہ مختلف ہوتاہے۔تاہم عام طور پرلوگ سات آٹھ گھنٹے کی نیند کو کافی سمجھتے ہیں۔

بعض افراد چار پانچ گھنٹے میں اچھی گہری نیند سولیتے ہیں اور صبح تروتازہ اٹھتے ہیں۔ نیند میں خلل یا بے خوابی میں اخروٹ مفید ہے۔

اخروٹ میں میلا ٹونین موجود ہے جو کہ سکون کی نیند کے لئےانتہائی موزوں ہے۔اخروٹ میں موجود اومیگا تھری فیٹی ایسڈز بلڈ پریشر کو کنٹرول کرنے اور تناؤ میں مفید ہیں،جس سے نیند بہتر ہوتی ہے۔

 ایک تحقیق میں بتایا گیا کہ روزانہ سات اخروٹ کھانا سانس کے امراض ،دماغی تنزلی اور ذیابیطس سے تحفظ کے ساتھ ساتھ کینسر سے تحفظ فراہم کرسکتے ہیں۔

موسم سرما میں خشک میوہ جات کھانا زیادہ لطف دیتاہے۔ان میوہ جات میں ایک اخروٹ بھی ہے جو اپنے اندر کئی طبی فوائد سمیٹے ہوئے ہے.

ایک تحقیق میں سامنے آیا ہے کہ اخروٹ کھانے سے دل کی بیماریوں اور کولیسٹرول جیسے مسائل سے محفوظ رہا جا سکتاہے۔

امریکی یونیورسٹی کی ایک غذائی ڈاکٹرکاکہناہے کہ اگر ہفتے میں پانچ اخروٹ کھا لیے جائیں یا کم از کم تین چائے کے چمچےاس کا روغن پی لیا جائے تو دل کی بند شریانیں کھولنےکا سبب بھی بنتاساتھ خون کی روانی میں بہتری آتی ہے۔

محقیقین کے مطابق اگراخروٹ روزانہ کھایا جائے تو اس سے دل کی بیماریاں ٹھیک ہوجاتی ہیں۔

ذیل میں اخروٹ کے چند فوائد درج ہیں۔

ذیابیطس کنٹرول کرنے کا ذریعہ

اخروٹ میں موجود فیٹی ایسڈز کی مقدارکیلوریز گھٹانےکیلئے مفید ہے۔اگرروزانہ اخروٹ کھایا جائے تو میٹا بولک کا نظام بہتر حالت میں رہتاہے۔

اخروٹ کھانے سے خون کی شریانوں کے افعال میں بہتری جبکہ جسم کے لئے نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح میں کمی آتی ہے۔

دونوں عناصر کی زیادتی سے ذیابیطس ٹائپ ٹو کا خطرہ بڑھتاہے۔

جلدی صحت کے لئےمفید اورقبل ازوقت سفید بالوں سے تحفظ

اومیگا تھری فیٹی ایسڈ اور وٹامن ای سے بھرپور خشک میوہ اخروٹ بالوں میں نمی بر قراررکھنے میں مدد دیتا ہے،اخروٹ میں کاپر کی مقدار بھی خاصی ہوتی ہے جو جلد اور بالوں کے قدرتی رنگ کو برقراررکھنے میں مدد دیتے ہیں۔

دل کو صحت مند بنائے

اخروٹ میں اومیگا تھری فیٹی ایسڈز کی مناسب مقدار ،خون کی شریانوں کے نظام کے لئے مفید ہے۔ روزانہ صرف دواخروٹ کھانا بھی بلڈپریشر کو کم کرنے میں مدد دیتاہے،جس سے ہارٹ اٹیک اور فالج کا خطرہ کم ہوتاہے۔

اومیگا تھری فیٹی ایسڈز جسم کے لئے نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح بھی کم کرتاہے جبکہ فائدہ مند کولیسٹرول کی مقدار بڑھاتا ہے،جوکہ دل کی صحت کو بہتر بنانے کیلئے معاون ہے۔

بریسٹ کینسر سے حفاظت

امریکی تحقیق میں بتایا گیا کہ روزانہ چند اخروٹ کھانے سے خواتین میں بریسٹ کینسر کا خطرہ کم ہو سکتاہے۔
ہڈیوں کے لئے موزوں
اخروٹ میں موجود ایک فیٹی ایسڈالفا لائنو لینک ایسڈ ہڈیوں کو صحت مند اور مضبوط بنانے میں مفید ہے جبکہ اومیگا تھری فیٹی ایسڈزورم کو کم کرتے ہیں جس سے ہڈیاں مضبوط ہوتی ہیں۔

گنج پن سےنجات

مختلف طبی تحقیقی رپورٹس میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ اخروٹ کے تیل کا استعمال معمول بنانا گنج پن کے مسائل سے محفوظ رکھتاہے۔اس تیل کے استعمال سے بالوں میں خشکی بھی دور ہوتی ہے۔

اخروٹ میں ایسے پروٹینز،وٹامنز ،منرلز اور فیٹس ہوتے ہیں جو جسم میں کولیسٹرول لیول کو کم رکھنے میں مفید ہیں جس سے دل کے دورے کا خطرہ بھی کم ہو جاتاہے۔


متعلقہ خبریں

کورونا تباہی مچانے یورپ پہنچ گیا، پہلامریض ہلاک

یورپ میں کورونا وائرس تبا ہی مچانے کےلئے پہنچ گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق فرانس میں پہلی...

پاکستانی ڈاکٹروں کا بڑا کارنامہ، کمسن بچے کا کٹا ہاتھ جوڑ دیا

پاکستانی ڈاکٹروں کا بڑا کارنامہ، کمسن بچے کا کٹا ہاتھ جوڑ دیا

ملتان  نشتر پاک اٹالین ماڈرن برن یونٹ کے ڈاکٹرز نے بڑا کارنامہ انجام دیتے ہوئے ڈیڑھ سالہ...

مافیا

شعبہ صحت میں انقلابی تبدیلیاں لا رہے ہیں، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ  ملک میں شعبہ صحت میں انقلابی تبدیلیاں لا رہے ہیں۔...

کورونا وائرس

کورونا وائرس کی چین کے بعد اگلی منزل کیا ہوگی، تحقیقات شروع

یوں تو مہلک کورونا وائرس چین کے علاوہ بہت سے یورپی ممالک سمیت بعض ایشیائی ملکوں تک...


ضرور پڑھیں

ایوانکا ٹرمپ کی مسجد میں حاضری

امریکی صدر کی صاحبزادی ایوانکا ٹرمپ اس وقت ابو ظہبی کے دورے پر ہیں جہا ں انھوں...

ثانیہ مرزا کون سی فلم دیکھنے کےلئے ہو گئی بے قرار

بھارت کی ٹینس اسٹار اور پاکستانی کرکٹر شعیب ملک کی اہلیہ ثانیہ مرزا اپنی زندگی پر بننے...

محسن عباس کو بڑی خوشخبری مل گئی

پاکستان شو بز انڈسٹری کے نا مور اداکار،میزبان اورگلوکار محسن عباس حیدر نے فلم سائن کر لی...

کورونا وائرس

کورونا وائرس کی چین کے بعد اگلی منزل کیا ہوگی، تحقیقات شروع

یوں تو مہلک کورونا وائرس چین کے علاوہ بہت سے یورپی ممالک سمیت بعض ایشیائی ملکوں تک...