امریکہ دوسرے ممالک پر اپنی مرضی مسلط کرنا بند کرے، روسی وزیر خارجہ

اسفا سروت

26th Sep, 2021. 09:30 am

روسی وزیر خارجہ سرگئی لارروف کا کہنا ہے کہ امریکہ دوسرے ممالک پر اپنی مرضی مسلط کرنا بند کرے۔

تفصیلات کے مطابق روسی وزیر خارجہ سرگئی لارروف نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ حق خودارادیت کے حوالے سے دوہرا معیار ختم کیا جائے، مغرب کے مفاد میں ہو تو حق خودارادیت کے لئے آواز اٹھاتے ہیں۔

سرگئی لارروف نے مزید کہا کہ ملٹری مداخلت کی پالیسی کے بعد ڈویلپمنٹ پالیسی مسلط کرنے سے بھی گریز کیا جائے۔

اس سے قبل روسی وزیر خارجہ سرگئی لاروف نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ طالبان حکومت کو بین الاقوامی سطح پر تسلیم کرنے پرفی الحال غور نہیں کیا جا رہا ہے۔

سرگئی لاروف اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں عالمی رہنماؤں کے سالانہ اجتماع کے موقعے پر خطاب کر رہے تھے۔ ان کا یہ تبصرہ طالبان کی جانب سے اقوام متحدہ میں اپنے ایلچی کی نامزدگی کے بعد سامنے آیا تھا۔ عالمی ادارے میں افغانستان کی نشست طالبان کو دینے پر ممالک کے درمیان اختلاف سامنے آیا۔

روسی وزیر خارجہ نے ایک نیوزکانفرنس میں کہا تھا کہ فی الوقت طالبان کو بین الاقوامی سطح پر تسلیم کرنے کا معاملہ فی الوقت زیرغور نہیں ہے۔

طالبان کے وزیرخارجہ امیرخان متقی نے گزشتہ سوموار کو دوحہ میں مقیم اپنے ترجمان سہیل شاہین کو اقوام متحدہ میں افغانستان کا نیا سفیر نامزد کیا تھا۔ طالبان نے گزشتہ ماہ افغانستان میں اقتدار پر قبضہ کر لیا تھا اور اشرف غنی کی حکومت کا خاتمہ کردیا تھا۔ اس کے ساتھ ہی انھوں نے غنی حکومت کے کم وبیش تمام فیصلے اور اقدامات کالعدم قرار دے دیئے تھے۔

Adsence 300X250