Advertisement
Advertisement
Advertisement
Advertisement

اسٹیشنری آئٹمز پر سیلز ٹیکس کی شرح میں اضافے کی مخالفت، میڈیکل آلات پر ٹیکس چھوٹ کی سفارش

Now Reading:

اسٹیشنری آئٹمز پر سیلز ٹیکس کی شرح میں اضافے کی مخالفت، میڈیکل آلات پر ٹیکس چھوٹ کی سفارش
سینیٹ

سینیٹ میں انتخابات ترمیمی بل 2024 کثرت رائے سے منظور

اسلام آباد: سینیٹ کی قائمہ کمیٹی خزانہ نے اسٹیشنری آئٹمز پر سیلز ٹیکس کی شرح میں اضافے کی مخالفت کردی۔

سینیٹر سلیم مانڈوی والا کی زیر صدارت سینیٹ کی قائمہ کمیٹی خزانہ کا اجلاس ہوا جس میں کمیٹی نے اسٹیشنری آئٹمز پر سیلز ٹیکس کی شرح میں اضافے کی مخالفت کردی۔

علاوہ ازیں کمیٹی نے سفارش کی کہ رفاعی ادارے جو میڈیکل آلات درآمد کرتے ہیں اس پر سیلز ٹیکس کی شرح کم کی جائے، گورنمنٹ کے اسپتالوں کے لئے درآمد ہونے والے آلات پر بھی ٹیکس چھوٹ ہونی چاہیے۔

درآمد کنندگان کا کہنا ہے کہ ایکسپورٹرز کے ٹرن اوور پر پہلے فکس ٹیکس تھا جو اب نارمل ٹیکس رجیم میں لایا گیا ہے، ٹرن اوور پر ٹیکس کو فکس ٹیکس رجیم سے نہ نکالا جائے۔

دوسری جانب ریٹیلرز کہتے ہیں کہ ہم ٹیکس دینا چاہتے ہیں پی او ایس کے نظام میں موجود ہیں، ٹیکس کی شرح 15 فیصد سے بڑھا کر 18 فیصد کیا جارہا ہے، حکومت کو ٹیکس ریٹ کے بجائے ٹیکس بیس کو بڑھانا چاہیے۔

Advertisement

ممبر آئی آر پالیسی ایف بی آر نے کہا کہ 18 فیصد سیلز ٹیکس بڑے برانڈز پر لگایا گیا ہے، جو وہاں جاتے ہیں وہ 15 کی بجائے 18 فیصد سیلز ٹیکس بھی دے سکتے ہیں۔

چیئرمین خزانہ کمیٹی کا کہنا تھا کہ ٹیکس کی شرح کو بڑھانا درست عمل نہیں ہے جو ٹیکس دے رہے ہیں ان پر بوجھ ڈالا گیا ہے۔

سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ  قانون پر چلنے والوں کے لئے اس ملک میں جینا مشکل ہوگیا ہے جب کہ ہم نے خود راستے بنائے ہیں اور نان فائلرز کو قانونی حیثیت دی ہے۔

سینیٹر شبلی فراز کا کہنا تھا کہ فائلر اور نان فائلر کا خیال ہی غلط ہے، جو فائلر بن گیا اس کی زندگی کو اجیرن بنایا جائے گا اور ڈر پیدا کیا جارہا ہے اور یہ ملک کے لئے لانگ ٹرم میں مزید خطرناک ثابت ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ جس طرح چلایا جارہا ہے اس طرح چلنا مشکل نظر آرہا ہے، جو پیسہ کما رہا ہے اسی پر نظر ہے، وہ حلال کما رہا ہے اور مذہب بھی اس کی اجازت دیتا ہے۔

سینیٹر شبلی فراز نے مزید کہا کہ تنخواہ دار طبقے پر ٹیکس میں اضافہ کیا گیا وہ چوری کرکے ٹیکس دے گا۔

Advertisement

اس پر ممبر آئی آر پالیسی نے کہا کہ جب شناختی کارڈ کی شرط رکھی تھی تو کچھ ماہ بعد حکومت کو واپس لینی پڑی۔

Advertisement
Advertisement
مزید پڑھیں

Catch all the Business News, Breaking News Event and Latest News Updates on The BOL News


Download The BOL News App to get the Daily News Update & Live News


Advertisement
آرٹیکل کا اختتام
مزید پڑھیں
وزیراعظم سے وفاقی وزیر داخلہ کی ملاقات
وفاقی حکومت کا سیاحت کے فروغ کے لئے بڑا فیصلہ
مبارک ہو؛ ذاتی پسند، بچپن کی محبت اور کرش جیت گیا، عظمیٰ بخاری
جمیعت علمائے اسلام سپریم کورٹ کے فیصلے کو جزوی طور پر تسلیم کرتی ہے، مولانا فضل الرحمان
مخصوص نشستوں پر سپریم کورٹ کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں، امیر جماعت اسلامی
اعلیٰ ثانوی بورڈ کراچی کا طلبہ کی آسانی کے لیے بڑا اقدام
Advertisement
توجہ کا مرکز میں پاکستان سے مقبول انٹرٹینمنٹ
Advertisement

اگلی خبر