تمباکو نوشی کرنے والے پائلٹس کا لائسنس معطل کیا جاسکتا ہے، سی اے اے


ارشاد علی سنجرانی رپورٹر

09th July, 2020
سی اے اے

جہازوں میں سگریٹ نوشی کر نے والے پائلٹس ہو جائیں ہوشیار، سول ایوی ایشن اتھارٹی ( سی اے اے)   نے سگریٹ نوشی  کے خلاف بڑے اقدام کا فیصلہ کرلیا۔

سول ایوی ایشن اتھارٹی ( سی اے اے)   کے ڈائیریکٹر فلائٹ اسٹینڈرڈ نے  نئے احکامات جاری کر دئیے۔

جاری کردہ احکامات کے مطابق  دوران پرواز کاک پٹ میں سگریٹ نوشی کر نے والے کپتان اور فرسٹ آفیسر کے لائسنس معطل  کیے جاسکتے ہیں۔

سی اے سے حکام کا کہنا ہے کہ   پائلٹس کی جانب سے دوران پرواز تمباکو نوشی قوانین کی خلاف ورزیاں کی جارہی ہیں ۔ دوران پراوز کپتان کاکپٹ میں تمباکو نوشی کی شکایات ملی ہیں۔

سی اے اے حکام کا کہنا ہے کہ  طیارے میں سگریٹ یا الیکٹرانک سگریٹ کی ممانعت ہے۔  تمباکو نوشی کرنے والوں کے خلاف تادیبی کارروائی کی جاسکتی ہے۔

 سی اے اے حکام کا  مزید کہنا ہے کہ تمباکونوشی کی شکایت کپتان، فرسٹ آفیسرایک دوسرے کے خلاف کر سکتے ہیں۔  کیبن کریو اور گراؤنڈ اسٹاف بھی تمباکو نوشی سے متعلق شکایات درج کراسکتا ہے۔

سی اے اے حکام کا کہنا ہے کہ  تمباکو نوشی کے مرتکب کاک پٹ کریو کو گراؤنڈ کرنے کے علاوہ جرمانہ بھی کیا  جائے گا اور  پائلٹس کے لائسنس بھی معطل کیے جاسکتے ہیں ۔

تمباکو نوشی کی شکایت درج کرانے والے کے خلاف کسی قسم کی انتقامی کارروائی نہیں کی جاسکے گی ۔مسافر بھی اگر پائلٹ کو سگریٹ نوشی کرتے دیکھ لے تو اس کی شکایت پر بھی کارروائی ہوگی۔