Advertisement
Advertisement
Advertisement
Advertisement

نوشکی میں نامعلوم افراد نے 9 مسافروں سمیت 11 افراد کو قتل کردیا

Now Reading:

نوشکی میں نامعلوم افراد نے 9 مسافروں سمیت 11 افراد کو قتل کردیا

نوشکی میں نامعلوم افراد نے 9 مسافروں سمیت 11 افراد کو قتل کردیا

کوئٹہ: بلوچستان کے ضلع نوشکی میں نامعلوم مسلح افراد نے مسافر بس سے پنجاب کے 9 افراد کو اغواء کرنے کے بعد قتل کر دیا جبکہ فائرنگ سے 2 افراد جاں بحق اور رکن صوبائی اسمبلی کے بھائی سمیت 5 زخمی ہو گئے۔

 پنجاب سے تعلق رکھنے والے مزدوروں کے قتل کا افسوسناک واقعہ نوشکی کے مقام پر قومی شاہراہ پر پیش آیا جہاں کوئٹہ سے تفتان جانے والی بس کو نامعلوم مسلح افراد نے راستے میں روک لیا اور مسافروں کے شناختی کارڈ چیک کرنے کے بعد 9 افراد کو ساتھ لے گئے۔

دہشت گردوں نے پنجاب سے تعلق رکھنے والے 9 مسافروں کو قریبی پہاڑوں میں لے جا کر گولیاں مار دیں، تاہم واقعے کی اطلاع ملنے کے بعد پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی اور مرنے والے افراد کی لاشیں قریبی پہاڑی کے قریب پل کے نیچے سے برآمد کر لیں۔

اس حوالے سے ایس پی نوشکی اللہ بخش نے بتایا کہ نوشکی کے قریب بس سے اتار کر اغوا ہونے والے 9 افراد کو مسلح افراد نے فائرنگ کرکے قتل کردیا، جن کا تعلق منڈی بہاوالدین اور گجرنوالہ سے تھا۔

ایس پی نے مزید بتایا کہ جاں بحق ہونے والے مزدود کوئٹہ سے تفتان جارہے تھے، تاہم مسلح افراد نے سلطان چڑھائی کے مقام پر ایک اور گاڑی پر بھی فائرنگ کی، جس کے نتیجے میں نوشکی سے تعلق رکھنے والے دو افراد جاں بحق ہوئے اور رکن اسمبلی غلام دستگیر کے بھائی سمیت 5 افراد زخمی ہوگئے۔

Advertisement

پورٹ طلب

وزیراعظم شہباز شریف نے بلوچستان کے ضلع نوشکی کے علاقے میں قومی شاہراہ پر بس مسافروں کے اغواء کے بعد قتل کے اندوہناک واقعے کی مذمت کرتے ہوئے رپورٹ طلب کرلی۔

وزیراعظم نے لرزہ خیز واقعے پر گہرے دکھ و افسوس کا اظہار کرتے ہوئے لواحقین سے اظہار تعزیت کی اور مقتولین کے لیے فاتحہ خوانی اور ان کی بلند درجات کے لیے دعا بھی کی۔

انہوں نے مزید کہا کہ رنج کی اس گھڑی میں سوگوارخاندانوں کےساتھ کھڑے ہیں، دہشت گردوں اور ان کے سہولت کاروں کو قرار واقعی سزادی جائے گی، دہشت گردی کے عفریت کو جڑ سے اکھاڑ پھینکیں گے۔

وزیر اعلیٰ بلوچستان کی مذمت

Advertisement

 وزیر اعلیٰ بلوچستان میر سرفراز بگٹی نے نوشکی میں بے گناہ مسافروں کے قتل کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ملوث دہشت گردوں کو معاف نہیں کیا جائے گا، مسافروں کا قتل غیر انسانی فعل، ناقابل معافی جرم ہے۔

سرفراز بگٹی نے کہا کہ دہشت گردوں کو ان کے منطقی انجام تک پہنچایا جائے گا، نہتے اور معصوم افراد پر بزدلانہ حملوں میں ملوث دہشت گردوں کا پیچھا کریں گے، دہشت گردوں کا قلع قمع کرکے دم لیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ دہشت گردوں کو چھپنے کی جگہ نہیں ملے گی آخری کونے تک پیچھا کریں گے، امن کے دشمن ملک کے دشمن ہیں، دہشت گردی کے واقعات کا مقصد بلوچستان کے امن کو ثبوتاژ کرنا ہے، ریاست اپنا کردار ادا کرے گی۔

وزیر اعلیٰ بلوچستان نے جاں بحق افراد کے اہل خانہ سے تعزیت کا اظہار کیا اور دہشت گردوں کو کیفر کردار تک پہنچانے کے عزم کا اعادہ بھی کیا۔

وزیر داخلہ کی مذمت

دوسری جانب وفاقی وزیر داخلہ نقوی نے بھی نوشکی میں مسافروں کے قتل کے واقعے کی مذمت کی اور المناک واقعے پر گہرے دکھ و افسوس کا اظہار کرتے ہوئے مقتولین کے لواحقین سے دلی ہمدردی و اظہار تعزیت کی۔

Advertisement

انہوں نے مزید کہا کہ ہماری تمام تر ہمدردیاں غمزدہ خاندانوں کے ساتھ ہیں، دکھ کی اس گھڑی میں سوگوار خاندانوں کے ساتھ کھڑے ہیں۔

مریم نواز کی مذمت

بعدازاں وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز نے مسافروں کے قتل کے افسوسناک واقعے پر رنج ودکھ کا اظہار کرتے ہوئے سوگوار خاندانوں سے اظہار تعزیت کی۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ پاکستانی ایک قوم ہیں اور ایک رہیں، نفرت بانٹنے والوں کا نام ونشان نہیں رہے گا۔

Advertisement
Advertisement
مزید پڑھیں

Catch all the Business News, Breaking News Event and Latest News Updates on The BOL News


Download The BOL News App to get the Daily News Update & Live News


Advertisement
آرٹیکل کا اختتام
مزید پڑھیں
ترک وزیر خارجہ کی چیئرمین سینیٹ یوسف رضا گیلانی سے ملاقات
آسڑیلین چیف آف ڈیفنس فورسز کی جوائنٹ اسٹاف ہیڈ کوارٹرز آمد
یوسف رضا گیلانی کو دھمکی آمیز میسج بھیجنے والا ملزم گرفتار
ججز تقرری کا معاملہ؛ جوڈیشل کمیشن اجلاس کا طلب
چیف جسٹس فائز عیسیٰ نے تحفے میں ملا قیمتی قلم توشہ خانہ میں جمع کروا دیا
پی ٹی آئی کو بڑا سیاسی دھچکا لگ گیا
Advertisement
توجہ کا مرکز میں پاکستان سے مقبول انٹرٹینمنٹ
Advertisement

اگلی خبر