Advertisement
Advertisement
Advertisement
Advertisement

نائب وزیراعظم اسحاق ڈار نے دوره کرغزستان ملتوی ہونے کی وجہ بتادی

Now Reading:

نائب وزیراعظم اسحاق ڈار نے دوره کرغزستان ملتوی ہونے کی وجہ بتادی

نائب وزیراعظم اسحاق ڈار نے دوره کرغزستان ملتوی ہونے کی وجہ بتادی

لاہور: نائب وزیراعظم و وزیر خارجہ اسحاق ڈار نے دوره کرغزستان ملتوی ہونے کی وجہ بتاتے ہوئے کہا کہ کرغز حکومت نے کہا ہے کہ آپ یہاں آئے تو اپوزیشن پروپیگنڈا کرے گی۔

کرغزستان میں پاکستانی طلبہ پر تشدد کے واقعے پر وفاقی وزیر اطلاعات عطاء اللہ تارڑ اور وزیر امور کشمیر انجینئر امیر مقام کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے اسحاق ڈار نے کہا کہ بشکیک میں پیش آنے والا واقعہ افسوس ناک ہے، کرغز وزیر خارجہ نے بتایا 16 غیرملکی طلبہ زخمی ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کرغزستان ہمارا اسلامی برادر ملک ہے، ہماری اپوزیشن چاہتی ہے کہ یہاں کرغز طلبہ نہ آئیں،  پچھلے چند سالوں میں ہم دنیا سے تنہائی میں چلے گئے تھے، وزیر اعظم شہبازشریف کی کاوشوں سے ہم اس تنہائی سے نکلے ہیں۔

اسحاق ڈار نے کہا کہ طلبہ کی اپنی مرضی ہے جوواپس آنا چاہ رہے ہیں انہیں لائیں گے، کرغزستان میں ہمارے 11ہزارطلبہ موجود ہیں، آج رات پاک فضائیہ کا طیارہ کرغزستان سےطلبہ کو واپس لائے گا، طلبہ کی جان ومال کی حفاظت وفاقی حکومت کی ذمہ داری ہے، فوری طور پر اسپیشل فلائٹس کا انتظام کیا گیا ہے۔

نائب وزیراعظم کا کہنا تھا کہ تشدد کا واقعہ پاکستانی طلبہ کے خلاف نہیں تھا، افسوس ناک بات یہ ہے اس معاملے پر سیاسی جماعت نے پروپیگنڈا کیا، غلط خبریں بھی پھیلائی گئیں، اپوزیشن کو اپنی گھٹیا سیاست سے باہر نکلنا چاہیے، بنگلہ دیشی طالبعلم کو دکھا کر کہا گیا کہ پاکستانی طالبعلم مارا گیا، ایک سیاسی جماعت سیاسی پوائنٹ اسکورنگ کر رہی تھی،

Advertisement

وزیر خارجہ نے کہا کہ ہمارے 6 طلب علم اس واقعے میں زخمی ہوئے ہیں، وزیر اعظم اس معاملے کو خود مانیٹر کر رہے ہیں، رابطے کے لیے وہاں نمبرز بھی دے دیے گئے ہیں، ہر شخص کی جان کی حفاظت ہماری ذمہ داری ہے۔

اسحاق ڈار نے کہا کہ کرغزستان کے صدر اور اعلیٰ افسران نے امن قائم کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے، کرغزستان کے معاملے پر محکمہ خارجہ کو متحرک کردیا گیا ہے، کرغزستان میں موجود ہمارے سفیر ہیں ان سے بھی رابطے میں ہیں۔

انکا کہنا تھا کہ کرغزستان کے پاکستان میں سفیر کی وزارت خارجہ طلبی بھی کی گئی ہے، کرغزستان میں پیش آنے والا واقعہ صرف پاکستانیوں کے ساتھ ہی نہیں تھا، وہاں موجود پاکستانی، بھارتی اور بنگالی طلبہ پر بھی تشدد کیا گیا۔

 وفاقی وزیر نے کہا کہ 130 پاکستانی طلبہ کل رات وطن واپس پہنچ چکے ہیں، واپسی کے لیے 50 کے قریب وہاں ہمارے طلبہ نے رابطہ کیا ہے، آج رات بھی ایک طیارہ کرغزستان پہنچے گا، ایئر فورس کے طیارے کے ذریعے مزید 3 فلائٹس سے 540 بچے پاکستان واپس آئیں گے، کرغزستان میں ہماری قونصلیٹ وہاں میں امن کے حوالے سے یقین دلاتے ہیں۔

نائب وزیراعظم نے کہا کہ کرغزستان کے وزیر خارجہ سے تفصیلی بات چیت ہوئی ہے، انکی ہائر اتھارٹی کا کہنا ہے کہ اب حالات قابو میں ہیں، کرغزستان کہتا ہے سوشل میڈیا پرپیڈ ولاگرز غلط انفارمیشن پھیلا رہے ہیں۔

اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ ہفتے کو کرغزستان کے سفیر کو دفترخارجہ طلب کیا اور تفصیلات مانگیں، یقین دلاتا ہوں کہ کرغزستان میں کوئی بھی طالب علم فوت نہیں ہوا، 4 سے5 طالب علم زخمی ہوئے ہیں جو اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں، کرغزحکومت نے کہا آپکے یہاں آنے سے اپوزیشن پروپیگنڈا کرے گی، غلط فہمی کی بنیاد پر یہ واقعات پیش آئے ہیں۔

Advertisement
Advertisement
مزید پڑھیں

Catch all the Business News, Breaking News Event and Latest News Updates on The BOL News


Download The BOL News App to get the Daily News Update & Live News


Advertisement
آرٹیکل کا اختتام
مزید پڑھیں
وزیرِ اعظم شہباز شریف کا صدر آصف زرداری سے ٹیلی فونک رابطہ
’عیدالاضحیٰ پر ملک بھر میں 68 لاکھ جانوروں کی قربانی ہوگی‘
قازقستان کے صدر نے وزیراعظم کی دورہ پاکستان کی دعوت قبول کر لی
وزیراعلیٰ پنجاب کی لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کے افسران اور ٹیموں کو شاباش
عوام کی جانب سے کوئی شکایات آئے تو فوری ازالہ کیا جائے، سعید غنی کی ہدایت
وزیراعظم شہبازشریف کی چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو کو ملاقات کی دعوت
Advertisement
توجہ کا مرکز میں پاکستان سے مقبول انٹرٹینمنٹ
Advertisement

اگلی خبر