یورپ میں پہلی ماحول دوست مسجدکاافتتاح

رومیصہ ملک - ویب ایڈیٹر - بول نیوز

06th December, 2019

ترک صدرطیب اردوان نے یورپ کی پہلی ماحول دوست مسجدکاباقاعدہ طورپرافتتاح کردیا ہے۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کےمطابق برطانیہ کے شہر کیمبرج میں پہلی ماحول دوست مسجدباقاعدہ طور پر کھول دی گئی ہے جس کا افتتاح ترک صدررجب طیب اردگان نے کیا۔

23ملین پاؤنڈز کی لاگت سے بننے والی اس ماحول دوست خوبصورت مسجد میں بیک وقت 1000 نمازی نماز پڑھ سکیں گے۔

افتتاحی  تقریب سے خطاب  کرتےہوئے ترک صد کا کہنا تھا  کہ  اس عبادت  گاہ  کی  تعمیر  دنیا  میں   بڑھتی ہوئی اسلام دشمنی کا بہترین جواب ہوگا۔

مسجد

برطانوی مسلمان گلوکار یوسف اسلام ، جو پہلے کیٹ اسٹیونس کے نام سے مشہور تھے ، مسجد کے سرپرستوں میں شامل ہیں  نے افتتاحی تقریب میں  شرکت کی  ۔

مسجد

برطانیہ کی پہلی ماوحول دوست مسجد کو مارکس بارفیلڈ آرکیٹیکٹس کمپنی نے ڈیزائن کیا ہے اورمسجد کو ماحول دوست بنانے کیلئے ایسی لکڑی استعمال کی گئی ہے جو ان جنگلات سے لی گئی ہے جن میں درخت کاٹنے سے ماحول پر اتنا اثر نہیں پڑتا ہے اور مسجد کی چھت ایسے بنائی گئی ہے کہ سارا سال روشنی اندر آتی رہے۔

مسجد

 

 مسجد  کے زیرِ زمین کار پارک میں 82 گاڑیاں اور 300 سائیکلیں کھڑی کرنے کی گنجائش ہے۔

مسجد کی تعمیر میں کیمبرج شہر کے فنِ تعمیر، اسلامی آرکیٹیکٹ اور علاقے کی ضرورتوں کا خاص خیال رکھا ہے۔

مسجد کو برطانیہ کی سب سے خوبصورت مسجد کہا جا رہا ہے۔


متعلقہ خبریں

کورونا وائرس کے سبب کل ایران میں نماز جمعہ کے اجتماعات نہیں ہوں گے

ایران میں کورونا وائرس کے انکشاف کے بعد مذہبی رسومات ی ادائگی اور ساتھ ہی ساتھ نماز...

ایرانی نائب صدر

ایرانی نائب صدر بھی کورونا وائرس کا شکار

ایرانی نائب وزیر صحت کے بعد ایرانی نائب صدر برائے خواتین و خاندانی امور معصومہ ابتکار میں...

بھارتی  دارالحکومت نئی دہلی میں متنازع شہریت کے قانون کے خلاف احتجاج کے دوران ہونے والے فسادات میں ہلاکتوں کی تعداد 32ہوگئی ہے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی  دارالحکومت نئی دہلی میں فسادات کے باعث ہلاکتوں کی تعداد 32 ہوگئی ۔پولیس کی جانب سے 106 افراد کو گرفتار  بھی کیا گیا ہے جبکہ 18 افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے ۔ مقامی حکام کا کہنا ہے کہ زخمیوں میں سے متعدد کی حالت نازک ہے اور ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہو سکتا ہے۔ نئی دہلی کی سڑکوں پر پولیس کی سرپرستی میں انتہا پسند ہندوؤں کا راج ہے۔ مسلح جتھوں نے مسلمانوں کی دکانیں اور گھر نذر آتش کردیے جبکہ متعدد مساجد کو  بھی شہید کردیا  گیا ہے۔ شہر میں شدید کشیدگی برقرار ہے جبکہ پولیس اور سیکیورٹی فورسز کی بھاری نفری تعینات ہے اور 4 مسلم اکثریتی علاقوں میں کرفیو نافذ کردیا گیا ہے۔ متاثرہ علاقوں میں دکانیں اور دفاتر بند ہیں، امتحانات ملتوی ہوگئے ہیں جبکہ خوف و ہراس کا عالم ہے۔ صورتحال اس قدر خراب ہے کہ زخمیوں کو اسپتال منتقل کرنے والی ایمبولینس پر  بھی حملے ہورہے ہیں۔ بھارتی میڈیا  کا کہنا ہے کہ حکومت نے مشیر قومی سلامتی اجیت دوول کو نئی دہلی کی صورتحال کو کنٹرول میں رکھنے کا ٹاسک سونپا ہے جس کے بعد اجیت دوول نے منگل کی رات جعفر آباد، سیلام پور اور دہلی کے متاثرہ شمال مشرقی علاقوں کا دورہ کیا۔ نئی دہلی کی ہائیکورٹ نے شہر میں ہونے والے فسادات پر رات گئے ہنگامی سماعت کی اور پولیس کو شہریوں کا تحفظ یقینی بنانے کی ہدایت کی جبکہ عدالت نے فسادات میں زخمی ہونے والوں کو فوری طور پر طبی امداد فراہم کرنے کی بھی ہدایت کی۔ دوسری جانب  بھارتی کانگریس کی صدر سونیا گاندھی   کا کہنا ہے کہ وزیر داخلہ امیت شاہ کو فرائض میں غفلت برتنے پر برطرف کردینا چاہیے ۔دہلی اور

او آئی سی کی بھارت میں مسلمانوں پر تشدد کے واقعات کی مذمت

اسلامی تعاون تنظیم نے بھارت میں مسلمانوں پر تشدد کے واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کی...

پوپ فرانسس

کورونا وائرس کے مریضوں کی عیادت کے بعد پوپ فرانسس بھی بیمار

کیتھولک مسیحیوں کے روحانی پیشوا پوپ فرانسس بھی دنیا بھر میں پھیلے وائرس کا شکار ہوگئے۔ پوپ...


ضرور پڑھیں

ڈرامہ عہد وفا کی آخری قسط میں کیا ہوگا؟

پاکستان کی ڈرامہ انڈسٹری میں مشہور ہونے والا ڈرامہ عہد وفا ریٹنگز کے نئے ریکارڈز بنانے میں...

خاتون

پاکستانی خاتون کی قبرپرٹک ٹاک ویڈیووائرل

حریم شاہ ،صندل خٹک اور مزارقائد پرٹک ٹاک گرل کےڈانس کے بعداب ٹک ٹاک پرایک اورویڈیو شئیرکی...

پاکستان میں رہتی ہوں اسلئے نہیں بتا سکتی

پاکستان شو بز کی خوبرو اداکارہ وماڈل گھا نا علی اکثرٹی وی ڈراموں میں نظر آتی ہیں...

سرپرائز ڈے، پاکستان کیلئے’یوم عزم‘ بھارت کیلئے’یوم شرم‘

حکومت پاکستان کی جانب سےستائیس فروری  ملک بھرمیں سرپرائزڈے کے طور پر منانے کا فیصلہ کیا گیا...