کورونا وائرس کا نیا ویریئنٹ ’’تباہ کن نہیں‘‘ ہے، برطانوی پروفیسر کا دعویٰ

Syed Wasif ur Rehman

28th Nov, 2021. 12:21 am

کورونا وائرس کی نئی قسم اومیکرون نے جہاں دنیا بھر کو ہیجان میں مبتلا کردیا ہے، پروازوں پر پابندیاں لگوادی ہیں، خام تیل کی قیمتیں گرا دی ہیں، عالمی ادارہ صحت کو یہ کہنے پر مجبور کردیا کہ یہ وائرس ’’تشویشناک‘‘ ہے، وہیں ایک برطانوی مائیکروبائیولوجسٹ کا دعویٰ ہے کہ نیا ویریئنٹ اومیکرون ’’تباہ کن نہیں‘‘ ہے۔

برطانوی سائنٹیفک ایڈوائزری گروپ فار ایمرجنسیز کیلیے خدمات فراہم کرنے والے پروفیسر کیلم سیمپل کا کہنا ہے کہ صورتحال کو ’’بڑھا چڑھا کر‘‘ پیش کیا جا رہا ہے۔

مائیکروبائیولوجسٹ پروفیسر کیلم سیمپل آج برطانوی نشریاتی ادارے سے بات چیت کر رہے تھے۔ ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ ویکسین اب بھی آپ کو کورونا وائرس سے محفوظ رکھ سکتی ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ وہ حالیہ پابندیوں کے حق میں ہیں کیونکہ ان کی وجہ سے اور زیادہ لوگ ویکسین لگوائیں گے۔

برطانیہ میں اب تک 50 ملین افراد کووڈ 19 ویکسین کی کم از کم ایک خوراک لے چکے ہیں۔ 42 ملین سے زائد افراد دو خوراکیں اور تقریباً 17 ملین افراد تیسری خوراک یا بُوسٹر شاٹ لگوا چکے ہیں۔

Square Adsence 300X250