ٹھنڈا دودھ صحت کیلئے کتنا فائدہ مند؟


ویب ڈیسکویب ایڈیٹر

17th October, 2020

عام طور پہ  دودھ صحت کےلیے بہت مفید ہوتا ہے۔   دودھ نا صرف کیلشیم اور وٹامن ڈی سے مالا مال ہے بلکہ اس میں صحت کو فروغ دینے والے ضروری غذائی اجزاء بھی شامل ہیں۔

لیکن کیا آپ کو معلوم ہے دودھ اگر ٹھنڈا استعمال کیا جائے ہو تو اس کے فوائد اور زیادہ  ہوجاتے ہیں۔

 ماہرین  نے ٹھنڈے دودھ کے کچھ حیرت انگیز فوائد بتائے ہیں جن کے بارے میں شاید آپ پہلے نہیں جانتے ہوں ، تو آیئے ہم آپ کو بتاتے ہیں۔

ایک تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ دودھ میں کیلشیم کا مواد جسم میں موجود زائد کیلوریز کی مقدارکو کم کرتا ہے اور مستحکم وزن کو بھی برقرار رکھتا ہے جبکہ دودھ کی صحت مند چکنائی سے بلڈپریشر کو کم کرنے میں بھی مدد ملتی ہے۔

عام طور پر لوگ گرم دودھ کا استعمال کرتے ہیں لیکن ماہرین  کا کہنا ہے کہ ٹھنڈا دودھ بھی صحت سے متعلق حیرت انگیز فوائد فراہم کرتا ہے جیسے یہ تیزابیت ختم کرتا ہے، چہرے کی جِلد کو نِکھارتا ہے، آئیے آج اُن فوائد کے بارے میں جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔

جسم کو ہائیڈریٹ رکھتا ہے:

ٹھنڈا دودھ انسانی جسم کو ہائیڈریٹ رکھنے کے لیے ایک بہترین مشروب ہے۔ چائے اور   کافی جیسے مشروب پینے سے ہمارے گُردوں کو نقصان پہنچ سکتا ہے جس کے نتیجے میں ہمارے جسم کو پانی کی کمی جیسے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

تاہم، جب مشروبات میں پوٹاشیم اور سوڈیم جیسے غذائی اجزاء اور الیکٹرو لائٹس ہوتے ہیں تو اُس سے ہمارا جسم ہائیڈریٹ رہتا ہے اور ٹھنڈا دودھ بھی اُنہی مشروبات میں سے ایک ہے۔

تیزابیت کا خاتمہ :

ایک گلاس ٹھنڈا دودھ تیزابیت کا بہترین علاج ہے۔ اگر آپ کے سینے میں جلن ہے تو آپ ایک گلاس ٹھنڈا دودھ پی سکتے ہیں۔ اس سے آپ کو فوری آرام مل سکتا ہے۔

اس کے علاوہ ٹھنڈا دودھ السر کے مریضوں کے لیے بھی بہت مفید ہوتا ہے، اس سے السر کا مرض ختم ہونے میں بھی مدد ملتی ہے۔

وزن کم کرنے میں معاون:

ٹھنڈے دودھ میں کیلشیم کی موجودگی آپ کے جسم کے میٹابالزم کے عمل کو بہتر بناتی ہے اور اس طرح جسم میں موجود زائد کیلوریز کی تعداد کم ہوتی ہے۔

 ایک گلاس ٹھنڈا دودھ پینے سے آپ کو کافی دیر تک بھوک بھی نہیں لگتی اور غیر ضروری غذا کھانے سے بچنے میں بھی مدد ملتی ہےجس سے وزن کم کرنے میں بھی مدد کرتا ہے۔

ٹونر کے طور پر کام کرتا ہے:

ٹھنڈا دودھ آپ کی جِلد کے لیے بھی بہت مفید ہوتا ہے۔ یہ حیرت انگیز ٹونر کا کام کرتا ہے جسے آپ چمکتی ہوئی جلد حاصل کرنے کے لیے ہر روز استعمال کرسکتے ہیں۔ ٹھنڈا دودھ لیں اور پھر روئی کی بال لیکر اُس دودھ میں بھگو کر اپنے چہرے پر آہستہ آہستہ مساج کریں۔ یہ وٹامن اے اور دوسرے اینٹی آکسیڈینٹ کا ایک پُرکشش ذریعہ ہے جو آپ کے چہرے کو چمکنے میں مدد کرتا ہے، داغ دھبوں، کیل مہاسوں اور ایکنی کو مزید کم کرتا ہے۔

موئسچرائزر کے طور پر کام کرتا ہے:

اگر آپ کی جِلد خشک ہے تو ٹھنڈا دودھ یقینا آپ کی مدد کرسکتا ہے کیونکہ یہ جِلد کی پی ایچ   سطح کو برقرار رکھنے میں مدد کرتا ہے جس کے لیے ٹھنڈے دودھ میں لیموں کے رس اور عرق گلاب کے چند قطرے شامل کریں اور پھر اس میں روئی کو بھگو دیں۔

اسے اپنے چہرے پر لگائیں اور 10 منٹ کے لیے چھوڑ دیں۔ اس کے بعد اپنے چہرے کو ٹھنڈے پانی سے دھو لیں۔ آپ کی جلد تر و تازہ ہوجائے گی۔