‘ٹسٹوسیٹرون’ نامی ہارمونز کی کمی، مردوں میں کورونا کی شدت میں اضافے کا باعث

ویب ڈیسکویب ایڈیٹر

01st Jun, 2021. 04:37 pm
ٹسٹوسیٹرون

تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ مردوں میں ‘ٹسٹوسیٹرون’ نامی ہارمونز کی کمی کے باعث کورونا شدت اختیار کرتا ہے۔

امریکہ کے واشنگٹن یونیورسٹی اسکول آف میڈیسین کی اس تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ کووڈ 19 سے متاثر مرد میں ٹسٹوسیٹرون کی سطح کم ہوتی ہے تو اس میں سنگین شدت کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے۔

تحقیق میں کووڈ کے 152 مریضوں کو شامل کیا گیا تھا جن میں 90 مرد جبکہ 62 خواتین شامل تھیں جن کا علاج سال 2020 مارچ کے مہینے میں ہورہا تھا۔

اس گروپ میں شامل سنگین حد تک بیمار 66 مردوں میں ٹسٹوسیٹرون کی سطح اسپتال میں داخلے کے وقت اور پھر 3 دن بعد دیکھی گئی جو معمولی حد تک بیمار مردوں کے مقابلے میں 65 سے 84 فیصد تک کم تھی۔

محققین نے بتایا کہ مجموعی طور پر ٹسٹوسیٹرون کی کم سطح سے وینٹی لیٹر، آئی سی یو میں داخلے یا موت کا خطرہ بہت زیادہ بڑھ جاتا ہے۔

تحقیق میں دیگر ہارمونز کی جانچ پڑتال بھی کی گئی مگر دریافت کیا کہ صرف ٹسٹوسیٹرون ہی مردوں میں کووڈ 19 کی شدت میں اضافے کا باعث بننے والا ہارمون ہے۔

Adsense 300×250